Skip Ribbon Commands
Skip to main content
Navigate Up
Sign In
نیشنل یونیورسٹی آف سائنسز ٹیکنالوجی اور نسٹ المنائی کا نادر منصوبہ  
 
سینٹرل سپیرئیر سروسز آف پاکستان کے امتحان کی تیاری کے لئے کلب کا قیام

نیشنل یونیورسٹی آف سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی ہیڈ کوارٹرز میں المنائی کلب کی بنیاد رکھ دی گئی

افتتاحی تقریب سات اگست 2017 کو ہوئی۔ ریکٹر نسٹ لیفٹیننٹ جنرل نوید زمان‘ہلالِ امتیاز(ملٹری) ‘(ریٹائرڈ) تقریبِ افتتاح کے مہمانِ خصوصی تھے۔  ریکٹر نسٹ نے کہا کہ نسٹ المنائی قومی زندگی کے ہر شعبے میں مادرِ علمی کے لئے امتیاز و انفرادیت کی چلتی پھرتی تصویر ہے۔ امر باعثِ مسرت ہے کہ ہمارے سابق طالب علم وہ جہاں بھی ہیں‘جو کچھ بھی ہیں‘پاکستان اور  نسٹ کا نام روشن کئے ہوئےہیں۔ پاکستان کے سب سے زیادہ محنت طلب‘ہمّت آزما اور ثمر آور مقابلے کے امتحان کی تیاری کے لئے المنائی کے سی ایس ایس افسروں اور نسٹ کے خواہش مند طلبا کے جذبے یکساں ہیں۔انہوں نے کہا کہ  سی ایس ایس کلب کے قیام کا مقصد سی ایس پی افسروں اور خواہش مند نسٹیئنز کو ایک پلیٹ فارم پر لا کر ہر قسم کی رہنمائی اور تیاری کا اہتمام کیا جائےگا۔ ایک لحاظ سے اس سے فریقین کویکساں  فائدہ پہنچے گا۔ 7اگست کی گفتگو گویا ابتدائیہ تھا افہام و تفہیم کا۔ کیا کرنا ہے‘کیسے کرنا ہے‘کیا نہیں کرنا‘کس عنصر سے زیادہ زیادہ فائدہ حاصل کرنا ہےیہ اور کئی پہلو زیرِ بحث آئے۔ جناب محمد فواد عامر (ڈائریکٹر‘آڈیٹر جنرل آف پاکستان) محترمہ فرح خان( اسسٹنٹ کمشنر اِ ن لینڈ ریونیو سروسز) ‘محترمہ زینب احمد چیمہ (اسسٹنٹ کمشنر ان لینڈ ریونیو سروسز)‘ مسٹر علی عباس (سیکشن افسر وزارت خزانہ)‘ اورسی ایس پی کے امتحان 2016 میں  سرِ فہرست رہنے والی محترمہ ملیحہ لیسرنے اپنے اپنے خطاب میں معلومات کے نئے دَر کھولے۔

حویلیاں کے نزدیک PIA کے سانحے میں جاں بحق ہونے والے مسٹر اسامہ احمد وڑائچ کے لئےایستادہ احتراماتِ فراواں پیش کئے گئے۔ نسٹ المنائی کے صدر مسٹر عمّار خان نے اپنے اختتامی کلمات میں کہا کہ افتتاحی تقریب دراصل انفرادی اور نسٹ کمیونٹی کے ربط و ضبط اور ترقی کا باعث بنی۔ انہوں نے طلبا کو اعلیٰ کردار اور قوم کی مثبت ترقی کے لئے قابلِ ذکر کردار ادا کرنے پر زور دیا۔ 

 
Skip Navigation Links.
نیشنل یونیورسٹی آف سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی
اسلام آباد پاکستان H-12
2017 © تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں